دھیان چند اسٹیدیم  سے لائیو : ایشیا ٹائمزنے  جشن ریختہ کے مختلف پہلووں کا جائزہ لیا،  یہاں سے بہت کچھ سیکھا جا سکتا ہے ؟

Ashraf Ali Bastavi

نئی دہلی/ ( ایشیا ٹائمز/اشرف علی بستوی  ) دہلی کے میجر دھیان چند اسٹیدیم میں سجی یہ رنگ برنگی محفل  محبان اردو کی ہے ، یہ ‘جشن ریختہ ‘ یعنی ‘اردو’ کا جشن ہے ،جسے سنجیو صراف نے بڑی خوبصورتی سے سجایا ہے ۔

نوجونوں کی بھیڑ سے یہ اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ نئی نسل میں اردو سے محبت اور لگاو وقت کے ساتھ ساتھ بڑھا ہے جشن ریختہ اس کا گواہ ہے ۔

البتہ تشویش ناک امر یہ ہے کہ یہاں روایتی اردو حلقے کی حاضری تشویش ناک حد تک کم  نظر آئی جو سال بھر سمپوزیم اور سمیناروں میں مصروف رہتا ہے

اس موقع پر ایشیا ٹائمز نے جشن ریختہ کے مختلف پہلووں کا جائزہ لیا ، لوگوں سئے بات کی اور ہفت روزہ مسلم دنیا کے ایڈیٹر سینئر جرنلسٹ زین شمسی سے دوران جشن بات کی  اور یہ جاننے کی کوشش کی آخر کیا وجہ روایتی اردو حلقہ ابھی تک جشن ریختہ میں آنے والے محبان اردو کو اپنے ساتھ لانے میں ناکام رہا ہے ، کیا یہاں سے کچھ سیکھا جا سکتا ہے ؟

ویڈیو رپورٹ

 

4 thoughts on “دھیان چند اسٹیدیم  سے لائیو : ایشیا ٹائمزنے  جشن ریختہ کے مختلف پہلووں کا جائزہ لیا،  یہاں سے بہت کچھ سیکھا جا سکتا ہے ؟

  • December 10, 2017 at 12:00 pm
    Permalink

    ایشیا ٹائمز کا شکریہ

    Reply
    • December 10, 2017 at 12:02 pm
      Permalink

      شکریہ ایشیا ٹائمس

      Reply
  • December 10, 2017 at 12:03 pm
    Permalink

    بہترین رپورٹ

    Reply
  • December 10, 2017 at 12:04 pm
    Permalink

    بہترین رپورٹ

    Reply

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *