مسلم منتظمہ کمیٹی جامع مسجد اتم نگر’ نے قبرستان میں مردوں کو دفنانے سے  کیا  منع  ؛ دہلی اقلیتی کمیشن نے کمیٹی کو دیا نوٹس 

Notice to Jal Board over denial of burial in qabristan

Asia Times Desk

نئی دہلی : اتم نگر جے جے کالونی میں واقع قبرستان میں آس پاس کے لوگ برسوں سے اپنے مردوں کو دفناتے تھے۔ یہ قبرستان فلڈڈپارٹمنٹ کی طرف سے سرکاری طور سے ۱۹۶۷  میں الاٹ کیا گیا تھا جب پرانی دلی سے کچھ لوگوںکو اجاڑ کر وہاں بسایا گیا تھا۔ اب وہاں ایک خودساختہ ”مسلم منتظمہ کمیٹی جامع مسجد اتم نگر“ نے قریب کی آبادیوں کے مردوں کو وہاں دفنانے سے منع کر دیا ہے حالانکہ قبرستان سب مسلمانوں کے لئے ہے اور مذکورہ کمیٹی کو ایسا فیصلہ کرنے کا کوئی حق نہیں ہے۔

شکایت موصول ہونے پر دہلی اقلیتی کمیشن کے صدر ڈاکٹرظفرالاسلام خان نے دہلی جل بورڈ کے سکریٹری کو خط لکھ کر معاملہ کی تحقیقات کی ہدایت کی ہے جس میں یہ شامل ہے کہ قبرستان کن شرطوں پر الاٹ کیا گیا تھا اور کیا مذکورہ کمیٹی کو ایسا کوئی اختیار ہے کہ دوسری کالونیوں کے مسلمانوں کو وہاں مردے دفن کرنے سے روک سکے۔

کمیشن نے اپنے خط میں کہا ہے کہ سرکاری طور سے الاٹ کردہ قبرستان میں کسی خودساختہ کمیٹی کے کہنے سے آس پاس کے علاقوں کے مردوں کو دفنانے سے نہیں منع کیا جا سکتا ہے۔ کمیشن نے ۳ستمبر تک جواب کے لئے سکریٹری دہلی جل بورڈ کو وقت دیا ہے۔ فلڈ دپارٹمنٹ دہلی جل بورڈ کے تابع ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *